140

کشمیر بلادِ اسلامیہ کا حصّہ ہے ، ہم اسے فراموش نہیں کر سکتے، کشمیریوں پر ہونے والے مظالم سے ہم سخت رنجیدہ ہیں۔

اسلامی جمہوریہ ایران سے تنویر مظہری کی رپورٹ۔
کشمیر بلادِ اسلامیہ کا حصّہ ہے ، ہم اسے فراموش نہیں کر سکتے۔ کشمیریوں پر ہونے والے مظالم سے ہم سخت رنجیدہ ہیں۔ مظلوم کشمیریوں کا دکھ ہم سب کا دکھ ہے۔ عالمی برادری کو انسانی حقوق اور احترامِ آدمیّت کا مظاہرہ کرتے ہوئے کشمیریوں کو اُن کا حق دلانا چاہیے۔ ان خیالات کا اظہار اسلامی جمہوریہ ایران میں منعقدہ ایک بین الاقوامی کشمیر کانفرنس میں کیا گیا۔ کانفرنس سے عراق، یمن، بحرین،شام،آذربائیجان، ایران ، قزاقستان، ترکمانستان، پاکستان، آزاد کشمیر اور مقبوضہ کشمیر کے ممتاز دانشوروں اور علمائے کرام نے خطاب کیا۔ مقررین نے کہا کہ کشمیری مسلمانوں کو خداوندِ عالم کی مدد و نصرت پر انحصار کرتے ہوئے استقامت کے ساتھ اپنی جدوجہد کو آگے بڑھاتے رہنا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ اپنے آئینی ، اخلاقی ،سیاسی اور دینی حقوق کیلئے جہاد کرنے والے کبھی تھکا نہیں کرتے۔ کشمیریوں نے گزشتہ چوہتر سالوں میں جو انتھک جدوجہد کی ہے وہ اپنا رنگ ضرور دکھائے گی۔کانفرنس کا اہتمام سپورٹ کشمیر انٹرنیشنل فورم نے ایران کے شہر قم میں مجلس وحدت مسلمین شعبہ قم کے تعاون سے کیا۔
کانفرنس سے آقا نذر حافی، ڈاکٹر سید شفقت شیرازی، آقا احمد میر کشمیری،ڈاکٹر علی اکبر باراتی، محترم احمد شامی، شیخ حسین کریمو، اور سید مرتضی سمیت متعدد شرکا نے گفتگو کی۔
۵فروری کو اس کانفرنس کا آغاز تلاوتِ قرآن مجید سے کیا گیا اور کانفرنس کا افتتاحی بیانیہ محترم نذر حافی نے بیان کیا جبکہ اس کانفرنس کے ایجنڈے کی اہمیت اور مقاصد پر حجۃ الاسلام ڈاکٹر شفقت شیرازی نے روشنی ڈالی۔ یاد رہے کہ سپورٹ کشمیر انٹرنیشنل فورم کی طرف سے ۵فروری کے حوالے سے عرب سوشل میڈیا پر ایک موثر اور منظم کمپین بھی چلائی گئی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں