119

گوجرانوالہ محلہ شہباز کالونی کنگنی والا کا علاقہ سوئی گیس سے محروم ہو چکا ہے

گوجرانوالہ محلہ شہباز کالونی کنگنی والا گوجرانوالہ کا علاقہ سوئی گیس سے محروم ہو چکا ہے محکمہ سوئی نادرن گیس گوجرانوالہ کو کی درخواست دے دی گئی اور کئی مرتبہ جا کر ہم کو کہا گیا وہ ملازم بیچ کر پہلے جو لاہور لوہے کی لینی تھی اس میں پانی آگیا تھا دوبارہ لینے پلاسٹک کی ڈالی گئی ہیں ہم بالکل گیس سے محروم ہوچکے ہیں محلہ مختار کالونی جو ہمارے ساتھ ہے اس میں فلم غیرت آتا ہے ہم اس کے ساتھ ہماری قانونی ہے کہ ہم گیس سے محروم محلہ مختار کالونی جو ہمارے ساتھ ہے اس میں فلم غیرت آتا ہے ہم اس کے ساتھ ہماری قانونی ہے کہ ہم گیس سے محروم ہوچکے ہیں محلہ مختار کالونی جو ہمارے ساتھ ہے اس میں فلم غیرت آتا ہے ہم اس کے ساتھ ہماری قانونی ہے کہ ہم گیس سے محروم ہوچکے ہیں ہم گیس کے بند میٹرو کا بل بھی ادا کر رہے ہیں اور گھر میں ایل پی جی بھی جلارہاہے اور ہم گیس کے بند میٹرو کا بل بھی ادا کر رہے ہیں اور گھر میں ایل پی جی بھی جلارہاہے اور لکھنی ہے بھی جلا رہے ہم گیس کے بند میٹرو کا بل بھی ادا کر رہے ہیں اور گھر میں ایل پی جی بھی جلارہاہے اور لکھنی ہے بھی جلا رہے ہیں ہم گیس کے بند میٹرو کا بل بھی ادا کر رہے ہیں اور گھر میں ایل پی جی بھی جلارہاہے اور لکھنی ہے بھی جلا رہے ہیں جناب اور اس کے علاوہ کئی مرتبہ محکمہ سوئی نادرن گیس گیس سالہ کو درخواست دی گئی درخواست پر ملازم ہوتے تو ضرور ہیں اور چلے جاتے ہیں اور ہمیں کہتے ہیں کہ موسم سرما ہے اس کے لیے گیس نہیں آتا اور ہمارے ساتھ شکور گزار اور ہمارے ساتھ ملا مختار کالونی اور مین چیک پوسٹ گزار پر گیس نہیں جاتا اور ہمارے علاقے کو گیس نہیں ملتا کیا ہم بھول نہیں آتا گورمنٹ کو کرتے جناب والا اس بارے میں فوری نوٹس لیا جائے نوٹس لے کر محکمہ سوئی نادرن گیس کا حکم جاری کیا جائے کہ اس علاقے کا گیس خوراک فراہم کیا جائے جناب والا ہمیں یہ بھی محکمہ سوئی نادرن گیس نے یہ مذاق بنایا ہوا ہے احل لکم خلابازوں نے اپیل اور درخواست کی ہے جناب وزیراعظم پاکستان عمران خان صاحب اور وزیر پٹرولیم اور سوئی نادرن گیس سے پیل اور درخواست کی ہے کہ جناب والا اس کے بارے میں فوری نوٹس لیا جائے اور جناب والا محکمہ سوئی نادرن گیس گوجرانوالہ کو حکم جاری کیا جائے اور محسن والے کا علاقہ کیا گیس فراہم کیا جائے جناب والا نوٹس لینے کی اپیل

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں