103

روشن پاکستان منصوبہ بلدیہ جلالپورجٹاں کے چیف آفیسر کو مہنگا پڑ گیا مسلح افراد کا بلدیہ آفس پر دھاوا چیف آفیسر مرزا مشرف بیگ پر تشدد

گجرات ( آکاش نیازی ) روشن پاکستان منصوبہ بلدیہ جلالپورجٹاں کے چیف آفیسر کو مہنگا پڑ گیا مسلح افراد کا بلدیہ آفس پر دھاوا چیف آفیسر مرزا مشرف بیگ پر تشدد قتل کی دھمکیاں پولیس نے فوری کاروائی کرتے ھوئے حملہ آور گرفتار کر لئے مقدمہ درج چیف آفیسر مرزا مشرف بیگ کی مدعیت میں تھانہ سٹی جلالپورجٹاں میں درج کروائی گئی ایف آئی آر نمبر 163/20 کے مطابق بلدیہ جلالپورجٹاں آفس میں صبح آٹھ بجے مسلح افراد قیصر سلیم مہر سکنہ محلہ فیض آباد بابے دا لاھور۔ شہزاد بٹ ولد خادم حسین بٹ سکنہ بابے دا لاھور۔ ظہیر شاہ ولد عزیز شاہ سکنہ کلاچور۔ مسلح آتشیں اسلحہ گھس آئے اور چیف آفیسر کے کمرہ میں گھس گئے اور چیف آفیسر مرزا مشرف بیگ سے بدتمیزی شروع کردی اور کار سرکار میں مداخلت کرنے لگے دفتر میں موجود ملازمین میں خوف و ھراس پھیل گیا قیصر سلیم نے میری کنپٹی پر 30 بور پسٹل رکھا اور مجھے قتل کی دھمکیاں دیں اور کیا تم آج دفتر سے باھر نہیں جا سکتے دفتر کے دروازے کو لاک کر دیا اور حبس بے جا میں رکھ لیا میرے شور واویلہ کرنے پر دیگر ملازمین نے مجھے آ کر آزاد کروایا بلدیہ آفس پر مسلح افراد کے حملہ کی اطلاع ملتے ھی ایس ایچ او تھانہ سٹی جلاپورجٹاں عدنان تارڑ معہ نفری موقع پر پہنچ گئے اور علاقہ کی ناکہ بندی کر کے ملزمان قیصر سلیم۔ شہزاد بٹ۔ اور ظہیر شاہ کو گرفتار کر لیا رابطہ کرنے پر ایس ایچ او عدنان تارڑ نے بتایا حملہ میں استعمال ھونے والا ناجائز اسلحہ 30 بور پسٹل بھی برآمد کر لیا گیا ھے کسی کو علاقہ میں غنڈہ گردی بدمعاشی نہیں کرنے دینگے گرفتار ملزمان کا سابقہ ریکارڈ بھی حاصل کر لیا گیا ھے بلدیہ آفس جلالپورجٹاں میں سیکورٹی کے لئے پولیس اھلکار بھی تعینات کر دئے گئے بلدیہ آفس جلالپورجٹاں پر مسلح افراد کے حملہ کی ڈپٹی کمشنر گجرات ڈاکٹر خرم شہزاد اور اے سی گجرات محمد جمیل نے بھی رپورٹ طلب کر لی ھے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں